Wednesday, May 7, 2014

زندہ لوگوں میں زندگی نظر آنی چاہیے، آنکھ کے آنسو کی صورت سہی، ہونٹوں کی ہنسی کی صورت سہی، ماتھے کی شکن کی صورت سہی، زندہ لوگوں میں زندگی نظر آنی چاہیے۔۔۔

5 comments:

  1. boht khoob Huma aur ap aysay hi lafzon ko zinda rekhen

    ReplyDelete
  2. lafz hamien zinda rakhtay hain, Akhtar sahab

    ReplyDelete
  3. ہما ھم خالق ھیں اور لفظ مخلوق اگرچہ مخلوق خالق کو زندہ نہیں رکھتی لیکن مخلوق کے باعث خالق کی پہچان ضرور ھوتی ھے۔ اس طرح لفظ ھماری پہچان ھیں،ھم انہیں زندکی دیتے ہیں اور وہ ھمیں شناخت۔ دل چاھتا تھا آپ کی بات سے اتفاق کرتے ھوئے لکھوں کہ وہ ھیں جاودانی عطا کرتے ھیں لیکن جاودانی تو صرف اک ھستی پر ھی سجتی ھے۔

    ReplyDelete
  4. yeh lafz ke khaliq ya makhlooq honay ki behess tou bari purani hai.. :) lekin choonke ham khud makhlooq hain so takhleeq hamien zinda rakhti hai.. lafz mein taqat hai, tassalli hai, dharas hai, dilasa hai.. lafz mein seher hai, jadoo hai.. kaheen lafz sitaron ki gard hain..roshan.. lafz hi kaheen tareek samandaron ka pani hain..

    ReplyDelete